اردو
Sunday 27th of September 2020
  12
  0
  0

سرورکائنات حضرت محمد مصطفی (ص) کی زندگی کے آخری دردناک لمحات

حجۃ الوداع سے واپسی کے بعد آپ کی وہ علالت جو بہ روایت مشکواۃخیبر میں دئے ہوئے زہر کے کروٹ لینے سے ابھرا کرتی تھی مستمر ہوگئی آپ علیل رہنے لگے بیماری کی خبر کے عام ہوتے ہی جھوٹے مدعی نبوت پیدا ہونے لگے جن میں مسیلمہ کذاب، اسود عنسی، طلیحہ، سجاح زیادہ نمایاں تھے لیکن خدانے انہیں ذلیل کیا اسی دوران میں آپ کو اطلاع ملی کہ حکومت روم
سرورکائنات حضرت محمد مصطفی (ص) کی زندگی کے آخری دردناک لمحات

حجۃ الوداع سے واپسی کے بعد آپ کی وہ علالت جو بہ روایت مشکواۃخیبر میں دئے ہوئے زہر کے کروٹ لینے سے ابھرا کرتی تھی مستمر ہوگئی آپ علیل رہنے لگے بیماری کی خبر کے عام ہوتے ہی جھوٹے مدعی نبوت پیدا ہونے لگے جن میں مسیلمہ کذاب، اسود عنسی، طلیحہ، سجاح زیادہ نمایاں تھے لیکن خدانے انہیں ذلیل کیا اسی دوران میں آپ کو اطلاع ملی کہ حکومت روم مسلمانوں کو تباہ کرنے کا منصوبہ تیار کر رہی ہے آپ نے اس خطرہ کے پیش نظرکہ کہیں وہ حملہ نہ کردیں اسامہ بن زید کی سرکردگی میں ایک لشکر بھیجنے کا فیصلہ کیا اور حکم دیاکہ علی کے علاوہ اعیان مہاجر و انصار میں سے کوئی بھی مدینہ میں نہ رہے اوراس روانگی پر اتنا زور دیا کہ یہ تک فرمایا ”لعن اللہ من تخلف عنہا“ جو اس جنگ میں نہ جائے گا اس پرخدا کی لعنت ہوگی اس کے بعد آنحضرت نے اسامہ کو اپنے ہاتھوں سے تیار کرکے روانہ کیا انہوں نے تین میل کے فاصلہ پر مقام جرف میں کیمپ لگایا اور اعیان صحابہ کا انتظار کرنے لگے لیکن وہ لوگ نہ آئے ۔ مدارج النبوت جلد ۲ ص ۴۸۸ و تاریخ کامل جلد ۲ ص ۱۲۰ و طبری جلد ۳ ص ۱۸۸ میں ہے کہ نہ جانے والوں میں ابوبکر و عمر بھی تھے ۔ مدارج النبوت جلد ۲ ص ۴۹۴ میں ہے کہ آخرصفر میں جب کہ آپ کو شدید درد سر تھا آپ رات کے وقت اہل بقیع کے لئے دعا کی خاطر تشریف لے گئے عائشہ نے سمجھا کہ میری باری میں کسی اور بیوی کے وہاں چلے گئے ہیں ۔ اس پر وہ تلاش کے لیے نکلیں تو آپ کو بقیع میں محو دعا پایا۔ اسی سلسہ میں آپ نے فرمایا کیا اچھا ہوتا ائے عائشہ کہ تم مجھ سے پہلے مرجاتیں اور میں تمہاری اچھی طرح تجہیز و تکفین کرتا انہوں نے جواب دیا کہ آپ چاہتے ہیں میں مرجاؤں تو آپ دوسری شادی کرلیں۔ اسی کتاب کے ص ۴۹۵ میں ہے کہ آنحضرت کی تیمارداری آپ کے اہل بیت کرتے تھے۔ ایک روایت میں ہے کہ اہل بیت کو تیمارداری میں پیچھے رکھنے کی کوشش کی جاتی تھی۔


source : tebyan
  12
  0
  0
امتیاز شما به این مطلب ؟

latest article

حضرت علی (ع) کی وصیت دوست کے انتخاب کے بارے میں
سیدہ سلام اللہ علیھا کی والدہ افضل النساء ہیں
روز عاشوره میں امام زین العابدین پر غشی کا طاری ہونا
شیعه فاطمه کے علاوه پیغمبر کی بیٹیوں سے اس قدر نفرت ...
تسبیح حضرت فاطمہ زھراء سلام اللہ علیہا
قرآن مجید میں علی (ع) کے فضائل
حضرت امام صادق علیه السلام کا ایک معجزه
عصمت پیغمبر ۖپر قرآنی شواہد
خلافت امیر المؤمنین علیہ السلام اور حدیث دوات و قلم
انسانی معاشرے کی راہ نجات اہلبیت اطہارہیں

 
user comment