اردو
Thursday 6th of May 2021
476
0
نفر 0
0% این مطلب را پسندیده اند

ماہ رمضان کے دنوں کی دعائیں

ابن عباس سے روایت ہے کہ رسول اﷲ نے فرمایا کہ ماہ رمضان کا ہر روزہ اپنی جگہ فضیلت رکھتا ہے ، لیکن ہر دن کی مخصوص دعا پڑھنے سے اسکی عظمت دو چند ہوجاتی ہے ۔آنحضرت نے رمضان مبارک کے دنوں میں پڑھی جانے والی دعاؤں کی فضیلت بھی بیان فرمائی ہے ۔ مگر یہاں ہم صرف ہر دن کی دعا ہی کا ذکر کریں گے۔

پہلے دن کی دعا:اَللّٰھُمَّ اجْعَلْ صِیامِی فِیہِ صِیامَ الصَّائِمِینَ وَقِیامِی فِیہِ قِیامَ الْقائِمِینَ وَنَبِّھْنِی فِیہِ عَنْ نَوْمَۃِ الْغافِلِینَ، وَھَبْ لِی جُرْمِی فِیہِ یَا إلہَ الْعالَمِینَ، وَاعْفُ عَنِّی یَا عافِیاً عَنِ الْمُجْرِمِینَ ۔

مزید پڑھیے۔۔۔

حدیث رسول اکرم(ص)

 

السلام علیک یا شهر الله الاکبر و یا عید اولیائه

********************

روزہ کی اہمیت کے متعلق نبی اکرم (ص) کی چند احادیث

روزه بدن کی زكواة:

قال رسول الله صلى الله علیه و آله وسلم  :

لكل شيئى زكاة و زكاة الابدان الصيام.

رسول خدا صلى الله علیہ و آلہ و سلم نے فرمایا:  ہر چیز کے لئے زکواة ہے اور بدن کی زکاة روزه ہے.

(الكافى، ج 4، ص 62، ح 3 )

روزه آتش دوزخ کی ڈهال

قال رسول الله صلى الله علیه و آله وسلم :الصوم جنة من النار.

رسول خدا صلى الله علیہ و آلہ وسلم نے فرمایا: روزه جہنم کی آگ کے مقابلے میں ڈهال کی حیثیت رکهتا ہے.

«يعنى روزه رکهنے کے واسطے سے انسان آتش جہنم سے محفوظ ہو جاتا ہے(الكافى، ج 4 ص 162 )

روزه کی اہميت

قال رسول الله صلى الله علیه و آله وسلم :

الصوم فى الحَرِّ جہاد

رسول خدا صلى الله عليہ و آلہ و سلم نے فرمایا: گرمی میں روزه رکهنا جہاد ہے.(بحار الانوار، ج 96، ص 257 )

روزے کی جزا

قال رسول اللہ صلى اللہ علیه و آله و سلم:

قال اللہ تعالى الصوم لى و انا اجزى به

رسول خدا نے فرمایا کہ خدا نے فرمایا ہے:  روزہ میرے لئے ہے (اور میرا ہے) اور اس کی جزا میں ہی دیتا ہوں.

(وسائل الشیعة ج 7 ص 294، ح 15 و 16 ; 27 و 30 )

طعام و شرابِ جنت نوش کرنے والے

قال رسول اللہ صلى اللہ علیه و آله و سلم:

من منعه الصوم من طعام يشتهيه كان حقا على اللہ ان يطعمه من طعام الجنة و يسقيه من شرابها.

رسول خدا صلى اللہ علیہ و آلہ و سلم نے فرمایا: جس شخص کو روزہ اس کی مطلوبہ غذاؤں سے منع کرکے رکهے خدا کی ذمہ داری ہے کہ اس کو جنت کی غذائیں کهلائے اور انہیں جنیتی شراب پلا دے.

(بحار الانوار ج 93 ص 331 )

خوشا بحال صائمین

قال رسول اللہ صلى اللہ علیه و آله و سلم :

طوبى لمن ظما او جاع للہ اولئك الذين يشبعون يوم القيامة

رسول خدا صلى اللہ علیہ و آلہ و سلم نے فرمایا: خوش بخت ہیں وہ لوگ جو خدا کے لئے بهوکے اور پیاسے ہوئے ہیں یہ لوگ قیامت کی روز سیر و سیراب ہونگے.(وسائل الشیعة، ج 7 ص 299، ح 2)

جنت اور روزہ داروں کا دروازہ

قال رسول اللہ صلى اللہ علیه و آله و سلم :

ان للجنة بابا يدعى الريان لا يدخل منه الا الصائمون.

رسول خدا صلى اللہ علیہ و آلہ و سلم نے فرمایا: جنت کا ایک دروازہ ہے جس کا نام ریان ہے اور اس دروازے سے صرف روزہ دار ہی داخل ہونگے.(وسائل الشیعة، ج 7 ص 295، ح 31. معانى الاخبار ص 116 )

مؤمنوں کی بہار

 

قال رسول اللہ صلى اللہ علیه و آله و سلم:

الشتاء ربيع المؤمن يطول فيه ليلہه فيستعين به على قيامه و يقصر فيه نهارہ فيستعين به على صيامه.

رسول خدا صلى اللہ علیہ و آلہ و سلم نے فرمایا: سردیوں کا موسم مؤمن کی بہار ہے جس کی طویل راتوں سے وہ عبادت کے لئے استفادہ کرتا ہے اور اس کے چهوٹے دنوں مین روزے رکهتا ہے.

(وسائل الشیعة، ج 7 ص 302، ح 3)

ماہ رمضان کی فضيلت

قال رسول اللہ صلى اللہ علیه و آله و سلم:

ان ابواب السماء تفتح فى اول ليلة من شهر رمضان و لا تغلق الى اخر ليلة منه .

رسول خدا صلى الله علیہ و آلہ و سلم فرمود: آسمان کے دروازے ماه رمضان کے پہلی رات کو کهلتے ہیں اور آخری رات تک بند نہیں ہوتے.(بحار الانوار، ج 93، ص 344)

ماہ رمضان کی اہميت

قال رسول اللہ صلى اللہ علیه و آله و سلم:

لو يعلم العبد ما فى رمضان لود ان يكون رمضان السنة

رسول خدا صلى الله علیہ و آلہ و سلم نے فرمایا: اگر بنده «خدا» کو معلوم ہوتا کہ رمضان کا مہینہ کیا ہے، (اور یہ کن برکتوں اور رحمتوں کا مہینہ ہے) وه چاہتا کہ پورا سال ہی روزہ رمضان ہوتا.(بحار الانوار، ج 93، ص 346)


source : http://rizvia.net/
476
0
0% (نفر 0)
 
نظر شما در مورد این مطلب ؟
 
امتیاز شما به این مطلب ؟
اشتراک گذاری در شبکه های اجتماعی:

latest article

اقوال حضرت امام علی النقی علیہ السلام
اصحاب اعراف
قرآن اور حسین
مودّت فی القربٰی
قرآن کریم کا اعجاز اور علی و فاطمہ (علیہما السلام) کی ...
حضرت امام حسین (ع) کی عزاداری پر وھابیوں کے اعتراضات
قرآن کے بارے میں چالیس حدیثیں
صحیفہ سجادیہ یا زبور آل محمد (ص)
روحانی بیماریاں
فزت و رب الکعبۃ

 
user comment