مومن کے احترام کے بارے میں چند باتیں


ویژگی های خودشناسان - جلسه بیست و سوم_شب 24 رمضان - رمضان 1436 - حسینیه همدانی ها -  

پیغمبر اکرم (ص) نے حجۃ الوداع کہ جو آپ کی زندگی کا آخری حج تھا اور اس میں بہت سارے مسلمانوں نے شرکت کی کے موقع پر سرزمین منا میں مسلمانوں کے درمیان کھڑے ہو کر پوچھا:

سب سے زیادہ محترم دن کونسا دن ہے؟
کہا: آج کا دن ( عید قربان)
پھر آپ نے پوچھا: سب سے زیادہ محترم مہینہ کونسا ہے؟
کہا: یہی مہینہ( ذی الحجۃ)
آپ نے پھر پوچھا: سب سے زیادہ محترم کون سی سرزمین ہے؟
کہا: یہی زمین( مکہ)
اس کے بعد آپ نے فرمایا: ’’فانّ دماءکم و اموالکم علیکم حرام کحرمۃ یومکم ھذا فی شھرکم ھذا فی بلدکم ھذا الیٰ یوم تلقونہ‘‘۔ (وسائل الشیعہ، ج۱۹ ص۳)
جان لیں کہ تمہارا خون اور تمہارا مال تمہارے اوپر ایسے ہی محترم ہے جیسے آج کا دن اس مہینے میں اس سر زمین پر اُس دن تک تمہارے لیے محترم ہے جس دن تم اللہ سے ملاقات کرو گے۔
۱: انسان اسلام اور ایمان کے سائے میں خاص احترام کا مالک ہے اور یہ احترام ایمان اور علم کے درجات کی بنا پر مختلف مراتب کا حامل ہے۔
۲: مسلمان کی جان، مال اور عزت کا احترام ہر مسلمان پر واجب ہے۔
۳: مسلمان کا جنازہ بھی زندہ مسلمان کی طرح محترم ہے۔
۴: مسلمان کو ایسی جگہ دفن کرنا جہاں اس کی بے احترامی شمار ہوتی ہو جائز نہیں ہے۔ (توضیح المسائل مراجع، ج۱، م۶۲۱)
۵: مسلمان کی قبر کا احترام واجب اور اس کی بے حرمتی کرنا حرام ہے۔( وہی حوالہ)

سخنرانی های مرتبط
پربازدیدترین
استاد استاد حسین انصاریان استاد انصاریان سخنرانی استاد انصاریان سخنرانی مکتوب استاد انصاریان سخنرانی استاد انصاریان در حسینیه همدانی ها سخنرانی ها