اردو
Tuesday 19th of January 2021
612
0
0%

اقوال حضرت امام حسن عسکری علیہ السلام

اقوال حضرت امام حسن عسکری علیہ السلام

حدیث (۱)
قال الامام الحسن العسکری علیه السلام :
من تواضع فی الدنیا لاخوانه فهو عند الله من الصدیقین و من شیعةعلی ابن ابی طالب حقا (۱)

ترجمہ ۔
حضرت امام حسن عسکری علیہ السلام فرماتے ھیں :
جو شخص دنیا میں اپنے مومن بھائیوں کے ساتھ تواضع و انکساری کے ساتھ پیش آئے گا،خدا کے نزدیک اس کا شمار صدیقین اور علی ابن ابی طالب(ع) کے شیعوں میں سے ھو گا ۔
حدیث (۲)
قال الامام الحسن العسکری علیه السلام :
ان الله جعل للشر اقفالا و جعل مفاتیح تلک الاقفال الشراب ، و الکذب شر من الشراب (۲)

ترجمہ ۔
حضرت امام حسن عسکریعلیہ السلام فرماتے ھیں :
خدا وند عالم نے شر کے لئے بھت سے قفل قرار دئے ھیں۔ انکی کنجی شراب ھے اور جھوٹ بولنا شراب سے بھی بد تر ھے ۔
حدیث (۳)
قال الامام الحسن العسکری علیه السلام :
رد المعتاد عن عادته کالمعجز(۳)

ترجمہ ۔
حضرت امام حسن عسکری علیہ السلام فرماتے ھیں :
لوگوں کی غلط عادتیں چھڑا دینا معجزہ سے کم نھیں ھے ،
حدیث (۴)
قال الامام الحسن العسکری علیه السلام :
اشد الناس اجتهاد ا من ترک الذنوب (۴)

ترجمہ ۔
حضرت امام حسن عسکری علیہ السلام فرماتے ھیں :
تمام لوگوں میں مجاھد ترین شخص وہ ھے جو گناہ کو ترک کر دے ۔
حدیث (۵)
 قال الامام الحسن العسکری علیه السلام :
لا تمار فیذهب بهاوٴک ، و لا تمازح فیجتر ء علیک ( ۵)

ترجمہ ۔
حضرت امام حسن عسکریعلیہ السلام فرماتے ھیں :
جدال نہ کرو ورنہ احترام ختم ھو جائیگا ، اور ھنسی و مذاق نہ کرو ورنہ لوگ گستاخی سے پیش آئیں گے ۔
حدیث (۶)
قال الامام الحسن العسکری علیه السلام :
لیست العبادة کثرة الصیام و الصلاة ، و انما العبادة کثرة التفکر فی امر الله ( ۶)

ترجمہ ۔
حضرت امام حسن عسکر ی علیہ السلام فرماتے ھیں :
کثرت روزہ و نماز کو عبادت نھیں کھتے بلکہ امر خدا میں تدبر و تفکر کرنا عبادت ھے ۔
حدیث (۷)
قال الامام الحسن العسکری علیه السلام :
من الفواقر التی تقصم الظهر جار ان رای حسنةً اطفاها ، وان رایٰ سیئة افشاها ( ۷)

ترجمہ
حضرت امام حسن عسکری علیہ السلام فرماتے ھیں :
کمر شکن بلاؤں میں سے ایک وہ ھمسایہ ھے جو جب کوئی اچھائی وخوبی دیکھتا ھے تو چھپاتا ھے اور جب برائی دیکھتا ھے تو اسے فاش کرتا ھے ۔


حوالہ:
۱۔بحار ج۷۵ص۱۱۷
۲۔ وسائل الشیعہ ج۲ ص ۲۲۳
۳۔ بحار ج ۱۷ ص ۲۱۷
۴۔بحار ج ۷۸ ص ۳۷۳
۵۔تحف العقول ص ۸۸۶
۶۔تحف العقول ص ۸۹۰
۷۔تحف العقول ص ۸۹۰
www.al-hadj.com

612
0
0%
 
نظر شما در مورد این مطلب ؟
 
امتیاز شما به این مطلب ؟

latest article

تنزانیہ میں «نهج البلاغه» کا ترجمہ سواحیلی زبان میں
اصحاب اعراف
بی بی معصومہ قم سلام اللہ علیہا ہمشیرہ حضرت امام علی ...
اسلامی قوانین اور کتاب خدامعصوم کی تفسیر سے
چھوڑکے قرآن جہلِ جہاں پر کتنے برس برباد کئے
حسین آؤ کہ آج دنیا کو پھر ضرورت ہے کربلا کی
گروہ ناکثین (بیعت شکن)
ام ابیھا کے معنی میں مختصر وضاحت
کتاب علی علیہ السلام کی حقیقت کیا ہے؟
مثالی معاشرہ نہج البلاغہ کی روشنی میں

 
user comment