اردو
Monday 15th of August 2022
0
نفر 0

آل خلیفہ رجیم کے مزدوروں اور بحرینی عوام کے درمیان شدید جھڑپیں

آل خلیفہ رجیم کے مزدوروں اور بحرینی عوام کے درمیان شدید جھڑپیں

بحرین کے شہر ’’البلاد القدیم‘‘ میں آج سنیچر کی شام کو بحرینی عوام اور حکومتی مزدوروں کے درمیان شدید جھڑپیں ہوئیں یہ جھڑپیں اس وقت شروع ہوئیں جب آل خلیفہ حکومت نے سیاسی قیدیوں کو پھانسی دئے جانے کے احکامات جاری کر دئے۔
بحرین کے اسلامی تنظیم الوفاق کے سیکرٹری جنرل شیخ علی سلمان کے پیدائشی شہر کے لوگوں نے بھی زبردست مظاہرے کر کے سیاسی قیدیوں کو سزائے موت دئے جانے کے حکم کو واپس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔
اطلاعات کے مطابق یہ جھڑپیں ابھی بھی جاری ہیں۔ کہا جاتا ہے کہ اس ملک کے علماء نے اس سے قبل بیانیہ جاری کر کے عوام کو سڑکوں پر نکل کر اپنے غم و غصے کا اظہار کرنے کی کال دی تاکہ عوام کے سڑکوں پر نکلنے سے شاید حکومت اپنے فیصلے پر نظر ثانی کرے اور سیاسی قیدیوں کی جانیں بچ جائیں۔

0% (نفر 0)
 
نظر شما در مورد این مطلب ؟
 
امتیاز شما به این مطلب ؟
اشتراک گذاری در شبکه های اجتماعی:
لینک کوتاه

latest article

جب تک وہابی ٹولے کو نیست و نابود نہ کریں چین کی ...
مشرق وسطی میں اسلامی تحریکوں کی بنیاد وحدت ...
انڈونیشیا میں وہابیوں کا شیعوں کی مساجد اور ...
قزاقستان ؛ وسطی ايشيا كی سب سے بڑی مسجد تعمير
ملا عمر اب تک غائب کیوں ہیں؟
دبئی میں اسلامی مقدسات كی توہين پر دو سال قيد كی ...
نجف اشرف میں بم دھماکہ
قرآن مجید کے بارے میں جھوٹے پروپیگنڈوں کی تردید
کوئٹہ، دہشتگردوں کی فائرنگ سے دو شیعہ بھائی سمیت ...
اردن میں حج فنڈ کی تاسیس

 
user comment