اردو
Sunday 17th of October 2021
70
0
نفر 0
0% این مطلب را پسندیده اند

حضرت فاطمہ زہرا (س) کا مثالی کردار

اقبال نے حضرت فاطمہ زہرا(س) کے کردار کو عورتوں کے لئے مثال اور نصب العین قرار دیا ہے بیٹی ، بیوی اور ماں کی حیثیت سے حضرت فاطمہ نے جو زندگی بسر کی وہ دنیا کی تما م عورتوں کے لئے نمونہ ہے۔ فررع تسلیم را حاصل بتول
حضرت فاطمہ زہرا (س) کا مثالی کردار

اقبال نے حضرت فاطمہ زہرا(س) کے کردار کو عورتوں کے لئے مثال اور نصب العین قرار دیا ہے بیٹی ، بیوی اور ماں کی حیثیت سے حضرت فاطمہ نے جو زندگی بسر کی وہ دنیا کی تما م عورتوں کے لئے نمونہ ہے۔

 

فررع تسلیم را حاصل بتول

مادراں رااسوہ کامل بتول

فطرت تو جذبہ ہا دارد بلند

چشم ہوش از اُسوہ زُ ہرا مند

 

اقبال کے نزدیک انسانی خودی کے بنیادی اوصاف فقر، قوت ، حریت اور سادگی سے عبارت ہیں اور یہ تمام حضرت فاطمہ کی زندگی میں بدرجہ اتم جمع ہوگئے تھے۔ انہی اوصاف نے ان کے اُسوہ کو عورتوں کے لئے رہتی دنیا تک مثالی بنا دیا ہے۔ اور ان کی ہستی کی سب سے بڑھ کریہ دلیل ہے کہ حضرت امام حسین جیسی عظیم و مدبر شخصیت کو انہوں نے اپنی آغوش میں پروان چڑھایا ۔ اقبال کی نظر میں عورت کے بطن سے اگر ایک ایسا آدمی پیدا ہوجائے جو حق پرستی اور حق کی خدمت کو اپنی زندگی کا نصب العین اور مقصد قرار دے تو اس عورت نے گویا اپنی زندگی کے منشاءکو پورا کر دیا۔ اسی لئے وہ مسلمان عورتوں سے مخاطب ہو کرکہتے ہیں۔

 

اگر پندے ز درو یشے پذیری

ہزار اُمت بمیرد تو نہ میری!

بتو لے باش و پنہاں شواز یں عصر

کہ در آغوش شبیرے بگیری!


source : tebyan
70
0
0% (نفر 0)
 
نظر شما در مورد این مطلب ؟
 
امتیاز شما به این مطلب ؟
اشتراک گذاری در شبکه های اجتماعی:

latest article

پیغمبر اسلام صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کی نصیحت
اقوال حضرت امام علی علیہ السلام
رجعت امام حسین علیہ السلام، قرآن و حدیث کی روشنی میں
ذبح اسمٰعیل اور شہادت امام حسین کا باہمی تعلق
فرزند رسول امام زین العابدینؑ کے یوم شہادت پرجموں ...
حضرت زھرا علمائے اھل سنت کی نطر میں
حضرت فاطمہ زھرا سلام اللہ علیھا کی چند احادیث
امام حسین علیہ السلام کی تحریک کے اہداف
افسوس کہ علی(ع) کو کوئی پہچان نہ سکا
اسلامى تمدن كى تشكيل

 
user comment