اردو
Sunday 27th of November 2022
0
نفر 0

کیا کسی شیعہ کی نماز جنازہ سنی سے پڑھوانا کافی ہے؟

کیا کسی شیعہ کی نماز جنازہ سنی سے پڑھوانا کافی ہے؟

علیکم السلام اگر نماز جنازہ پڑھانے والا سنی شخص، مذہب تشیع کے شرائط اور آداب کی رعایت کرے یا ایک ایسے علاقہ میں ھو ، جہاں پر تقیہ اور اتحاد مسلمین کی رعایت کرنا ضروری ھوتو کافی ہے، ورنہ کافی نہیں ہے بلکہ نماز دوبارہ پڑھنی چاہئیے۔ضمیمے:اس سوال کے بارے میں مراجع محترم تقلید کے جوابات حسب ذیل ہیں:حضرت آیت اللہ العظمی خامنہ ای ﴿مدظلہ العالی﴾اگر مذہب تشیع کے مطابق پڑھی جائے تو کوئی حرج نہیں ہے۔حضرت آیت اللہ العظمی مکارم شیرازی ﴿ مدظلہ العالی﴾اگر تقیہ اور اتحاد المسلمین کی جہت سے ھوتو کوئی حرج نہیں ہے، ورنہ اعادہ کیا جانا چاہئے۔حضرت آیت اللہ العظمی سیستانی﴿ مدظلہ العالی﴾احتیاط واجب کے مطابق کافی نہیں ہے۔حضرت آیت اللہ ہادوی تہرانی﴿ دامت بر کاتہ﴾اگر شیعہ طریقہ کے مطابق شرائط کی رعایت کی جائے اور قصد قربت ہو تو کافی ہے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۲۴۲


source : www.abna.ir
0
0% (نفر 0)
 
نظر شما در مورد این مطلب ؟
 
امتیاز شما به این مطلب ؟
اشتراک گذاری در شبکه های اجتماعی:

latest article

اگر كوئی شخص تنگدستی كی بناء پر شادی كرنا نہیں ...
امام حسین علیہ السلام کون ہیں؟
کیوں شیعہ ظہرين ومغربين ملا کر پڑھتےہیں ؟
عرش و کرسی کیا ھے؟
ہم نے مذہبی قصوں میں حضرت موسی (ع) کی پیدائش کے ...
غدیر کے با شکوہ اجتماع کا مقصد ؟
کیا آزر حضرت ابرہیم (علیه السلام) کا باپ تھا
قرآن مجید کی نظر میں مجسّمہ سازی اور نقاشی کے ھنر ...
کیا انبیاء اور اولیاء (علیہم السلام) کی قبروں کی ...
شیطان کی قید، ماہِ رمضان المبارک میں کیا حقیقت ...

 
user comment