اردو
Saturday 24th of February 2018
code: 83648

نائیجیرین فورس کا پرامن مظاہرین پر تشدد، اسلامی تحریک کا مذمتی بیان

نائیجیریا کی اسلامی تحریک نے پرامن مظاہرین پر سیکورٹی فورس کے تشدد کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے آیت اللہ ابراہیم زکزکی کی فوری رہائی کا مطالبہ کیا ہے۔

اسلامی تحریک کے جاری کردہ بیان کے مطابق آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزکی کی رہائی کے لیے دارالحکومت ابوجا میں پرامن مظاہرہ کرنے والوں پر پولیس کا تشدد قابل مذمت ہے۔نائیجریا کی پولیس نے اسلامی تحریک کے بانی آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزکی کی رہائی کا مطالبہ کرنے والے پرامن مظاہرین کو سرکوب کرنے کے لیے آنسوگیس کے گولوں اور پانی کی توپوں کا استعمال کیا ہے جس کے نتیجے میں متعدد مظاہرین زخمی ہوئے ہیں۔نائیجیریا کی فوج نے جس پر سعودی عرب کا اثر و رسوخ ہے ملک کے سرکردہ سیاسی اور مذہبی رہنما اور اسلامی تحریک کے سربراہ آیت اللہ ابراہیم زکزکی کو دسمبر دوہزار پندرہ سے گرفتار کر رکھا ہے اور عدالتی احکامات کے باوجود انہیں رہا کرنے سے گریز کر رہی ہے۔نائیجیریا کی فوج نے دسمبر دوہزار پندرہ میں چہلم امام حسین علیہ السلام کے موقع پر عزاداروں کے اجتماع پر حملہ کرکے سیکڑوں عزاداروں کو شہید کردیا تھا۔ایمنسٹی انٹرنیشنل سمیت متعدد عالمی اداروں نے نائیجیریا کی فوج کو کادونا صوبے میں شیعہ مسلمانوں کے قتل عام کا ذمہ دار قرار دیا ہے۔

latest article

  ایران سے کہہ دیں کہ ہم لڑنا نہیں چاہتے: یہودی ریاست کا ...
  اسلامی انقلاب کی سالگرہ کی ریلیوں میں بھرپور شرکت پر ...
  عراق اور شام میں آٹھ ہزار امریکی فوجی محاذ مزاحمت کی زد ...
  صومالیہ کے وزير اعظم نے وزراء خارجہ، داخلہ اور تجارت ...
  مصری وزارت خارجہ کا ترکی کو انتباہ/مصر کی حاکمیت اور ...
  آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کی جان خطرے میں ہے: بحرین 14 فروری ...
  ڈیڑہ اسماعیل خان میں تکفیری دھشتگردوں کے ہاتھوں شیعہ ...
  اس سال 22 بہمن کے دن عوام بعض امریکی حکام کی دھمکیوں اور ...
  چین: امریکہ امن و صلح کی مخالف سمت میں حرکت کرنے سے باز ...
  الازہر یونیورسٹی کے اساتید کی حرم امام علی (ع) میں ...

user comment