اردو
Thursday 19th of April 2018
code: 83363

قرآن ميں وقت کي اہميت کا ذکر (حصّہ سوّم)

قرآن ميں وقت کي اہميت کا ذکر (حصّہ سوّم)

بہتر  يہي ہے کہ مومن مسلمان اپنے نفس کو  پاک کرنے کے ليے اپنے گزرے ہو۔ لمحات سے عبرت حاصل کريں ۔ دن اور راتيں ہر نئي چيز کو پرانا کر ديتي ہيں اور دوري کو نزديک ، بچوں کو بوڑھا تو بوڑھوں کو فنا کرتي جاتي ہيں ۔  اس ليے مومن مسلمان کو  شب و روز سے غافل نہيں  ہونا چاہيے بلکہ  غور و فکر کرتے ہو۔ عبرت حاصل کرني چاہيے۔

ہر کام کے ليےايک خاص وقت مقرر ہے

بہتر يہي ہے کہ ہر مومن کو يہ بات معلوم ہوني چاہيے کہ کسي بھي کام کے ليے مناسب وقت کون سا ہے ۔ اس وقت کا غوروفکر کے ساتھ تعين کيا جانا چاہيے اور پھر اس کو عملي جامہ پہنانے کے ليے صدق دل سے اپني تمام توانائيوں کو بروے کار لاتے ہو۔ بہتر کام کے ليے صرف کيا جانا چاہيے۔

 مسلمان کي زندگي کا  نظام روزمرہ

اگر ايک مسلمان چاہے کہ اس کي زندگي بابرکت ہو تو اس کے ليے  ضروري يہ ہے کہ اپنے نظام روزمرہ کو اسلام کے بتاے ہو۔ طريقوں کے مطابق گزارے ۔ اسے ہر روز فجر کي نماز کے وقت بيدار ہونا چاہي۔ اور رات کو جلدي سو جانا چاہيے۔

کسي بزرگ کا قول ہے کہ

" ميں حيران ہوتا ہوں کہ  جو کوئي صبح کي نماز کو سورج طلوع ہونے کے بعد ادا کرتا ہے آخر خدا تعالي اسے کيسے روزي ديتا ہے "

کہنے کا مقصد يہ ہے کہ مسلمان کو صبح سويرے اٹھ کر اپني روز مرہ کي زندگي کا آغاز خدا کے ذکر سے کرنا چاہيے۔  قرآن کي تلاوت کرے اور کوشش کرے کہ سارے دن کے کاموں کے دوران اس کے ہاتھ سے کسي دوسرے مومن کو نقصان نہ پہنچے ۔

" بہتر ہے کہ مومن ہر روز کچھ وقت پڑھنے اور مطالعہ کرنے ميں گزارے تاکہ اس کے علم ميں اضافہ ہو " .(سوره طه)

قرآن ميں يہ بھي ذکر ہے کہ مسلمان کھيل کود جيسي سرگرميوں ميں حصہ لے سکتا ہے  مگر شرط يہ کہ کہ اس سے اس کے دوسرے حقوق متاثر نہ ہوں ۔

حضرت علي  عليہ السلام کا فرمان ہے کہ :

" اس سے پہلے کہ تمہارا محاسبہ کيا جا? خود اپنا محاسبہ کرو اور خود اپنے اعمال کو پرکھو اس سے پہلے کہ تمہارے اعمال کو پرکھا جائے"

 اس کام کو ہر دن کے آخر ميں  اور ہر  ھفتہ ، مہينہ اور ہر سال کے آخر ميں کرتے رہنا چاہي۔ اور اس طرح اپني جانچ پڑتال کرتے ہو۔ اصلاح کرتے رہنا چاہيے۔

ماضي اور مستقبل پر نظر ڈالنا ضروري ہے

انسان کے ليے بےحد ضروري ہے  کہ ماضي ميں ہونے والے واقعات کو جاننے اور سمجھنے کي کوشش کرتے  ہو۔ عبرت حاصل کرے ۔ ماضي ميں مختلف اقوام کے ساتھ جو واقعات پيش آ چکے ہيں ان سے باخبر اور آگاہ رہے تاکہ بہتر طور پر اپنے بہتر مستقبل کا تعين کر سکے ۔

خدا نے انسان کو ماضي کي يادوں اور باتوں کو محفوظ رکھنے کے ليے حا‌فظہ ديا ہے اسي طرح مستقبل کے فيصلوں کے ليے سوچنے سمجھنے  اور فيصلہ کرنے کي طاقت بھي عطا کي ہے تاکہ ماضي کے تجربات سے فائدہ اٹھاتے ہو۔ انسان اپنے بہتر مستقبل کے ليے اچھي حکمت عملي اپنا سکے ۔

latest article

  امام حسین علیہ السلام اور تقیہ
  قرآن کی روشنی میں منافقین کے نفسیاتی صفات
  مسجد النبی (ص)
  پیغمبر اعظم ﷺکی سیرت طیبہ اور وحدت
  جنگوں میں پیامبراکرم(ص)کی سیرت
  بعثت پیغمبراسلام(ص)
  بعثت کا دن
  سنتِ نبوی(ص) اور حقائق و اوھام
  قرآنی دعائیں
  قرآن و اھل بیت علیھم السلام

user comment

بازدید ترین مطالب سال

انتخاب کوفه به عنوان مقر حکومت امام علی (ع)

حکایت خدمت به پدر و مادر

داستانى عجيب از برزخ مردگان‏

فلسفه نماز چیست و ما چرا نماز می خوانیم؟ (پاسخ ...

رضايت و خشنودي خدا در چیست و چگونه خداوند از ...

چگونه بفهميم كه خداوند ما را دوست دارد و از ...

سخنراني مهم استاد انصاريان در روز شهادت حضرت ...

نرم افزار اندروید پایگاه اطلاع رسانی استاد ...

در کانال تلگرام مطالب ناب استاد انصاریان عضو ...

مرگ و عالم آخرت

پر بازدید ترین مطالب ماه

سِرِّ نديدن مرده خود در خواب‏

مبعث پیامبر اکرم (ص)

ذکری برای رهایی از سختی ها و بلاها

سرانجام كسي كه نماز نخواند چه مي شود و مجازات ...

طلبه ای که به لوستر های حرم امیر المومنین ...

تنها گناه نابخشودنی

چند روايت عجيب در مورد پدر و مادر

رمز موفقيت ابن ‏سينا

رفع گرفتاری با توسل به امام رضا (ع)

راه كنترل شهوت چگونه است؟

پر بازدید ترین مطالب روز

اهمیت و ارزش و فضیلت های ماه شعبان

اهمیت ذکر صلوات در ماه شعبان

آیا حوریان و لذت های بهشتی فقط برای مردان است؟

بهترین دعاها برای قنوتِ نماز

آيا فكر گناه كردن هم گناه محسوب مي گردد، عواقب ...

وظیفه ما در مقابل اموات که در برزخ هستند چیست؟

آیا تصویر امام زمان را دیده اید!

داستان شگفت انگيز سعد بن معاذ

چگونه بفهیم عاقبت به خیر می‌شویم یا نه؟

چگونه امام موسی کاظم (ع) که همیشه در زندان ...