اردو
Monday 17th of June 2019
  795
  0
  0

ایران اور خلاء کا سفر

ایران ایرو سپیس آرگنائزیشن کے سربراہ نے کہا ہے کہ انسان کو خلا میں روانہ کرنے کے لئے وسیع تحقیقات و مطالعات کا آغاز ہوچکا ہے اور یہ مہم سر کرنا آیندہ دس سالوں کے دوران ہمارے اہداف میں شامل ہے.

ایران ایروسپیس آرگنائزیشن کے سربراہ رضا تقی پور نے کہا کہ آیندہ دس برسوں میں اپنا پہلا خلاباز خلا میں روانہ کرنے کے لئے راہ ہموار کردے اور آیندہ چھ مہینوں سے ایک سال تک اس منصوبے پر عملدرآمد کی حتمی تاریخ کا اعلان کیا جائے گا اور آیندہ 14 برسوں میں ایروسپیس کے حوالے سے علاقے کا پہلا رتبہ حاصل کرنے کا ہدف ہے.

انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں ایران نے دس سالہ منصوبہ تیار کیا ہے اور حالیہ راکٹ بھیجنے کے نتائج سے اس منصوبے کی کامیابی واضح نظر آتی ہے.

انہوں نے کہا کہ ہمارے منصوبے میں سیارچے خلا میں بھیجنے کے لئے مختلف راکٹوں کی تیاری بھی شامل ہے جبکہ اس قسم کے راکٹ تیار کرنے کی ٹیکنالوجی اس سے قبل دنیا کی چند ہی ممالک کے انحصار میں تھی اور ایران سفیر نامی سیارچہ کامیابی کے ساتھ خلا میں بھیج کر ان ممالک کی صف میں شامل ہوچکا ہے.

 

 

انہوں نے پریس ٹی وی کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے اسلامی ممالک کے ساتھ «بشارت» نامی سیارچے کے مشترکہ منصوبے میں ایران کے تعاون کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایران ایشیا – بحرالکاہل خلائی تعاون کا بانی بھی ہے اور مستقبل قریب میں SMMS نامی مشترکہ سیارچہ خلا میں روانہ کیا جائے گا اور ایران اس سیارچے کی تیاری میں ایشیا-بحرالکاہل کے ساتھ تعاون کررہا ہے.


source : http://abna.ir/data.asp?lang=6&Id=117726
  795
  0
  0
امتیاز شما به این مطلب ؟

latest article

      خلیج فارس کی عرب ریاستوں میں عید الاضحی منائی جارہی ہے
      پاکستان، ہندوستان، بنگلہ دیش اور بعض دیگر اسلامی ...
      پاکستان کی نئی حکومت: امیدیں اور مسائل
      ایرانی ڈاکٹروں نے کیا فلسطینی بیماروں کا مفت علاج+ ...
      حزب اللہ کا بے سر شہید پانچ سال بعد آغوش مادر میں+تصاویر
      امریکہ کے ساتھ مذاکرات کے لیے امام خمینی نے بھی منع کیا ...
      کابل میں عید الفطر کے موقع پر صدر اشرف غنی کا خطاب
      ایرانی ڈاکٹروں کی کراچی میں جگر کی کامیاب پیوندکاری
      شیطان بزرگ جتنا بھی سرمایہ خرچ کرے اس علاقے میں اپنے ...
      رہبر انقلاب اسلامی سے ایرانی حکام اور اسلامی ممالک کے ...

 
user comment