اردو
Wednesday 24th of April 2019
  844
  0
  0

راولپنڈی: طالبان کا پھر بھی مسجد پر حملہ!!

راولپنڈی پریڈ لائن مسجد میں دہشت گردوں کے حملے میں 40 افراد جاں بحق ہوگئے ہیں۔ 

اہل البیت (ع) نیوز ایحنسی ـ ابنا ـ نے پاکستانی ذرائع کے حوالے سے رپورٹ دی ہے پاکستان کے شہر راولپنڈی میں پریڈ لائن مسجد میں طالبان دہشت گردوں کی طرف سے فائرنگ اور خودکش حملوں میں 40افراد  جاں بحق اور متعدد زخمی ہوگئے ہیں جاں بحق اور زخمی ہونے والوں میں معصوم بچے بھی شامل ہیں۔
راول پنڈی کے علاقے صدرمیں پریڈلین کی مسجد میں نمازجمعہ کے وقت کئے جانے والے دہشت گردوں کے حملے میں17معصوم بچوں سمیت 40 نمازی شہید جبکہ 83 سے زائد زخمی ہو گئے ہیں۔ 
شہید ہونے والوں میں 7 آفیسر، تین سپاہی اور 17 بچے اور 10 شہر ی شامل ہیں۔
حملوں کے بعدسکیورٹی فورسز کی جوابی کارروائی میں 4 دہشت گرد مارے گئے۔ 
شہداء میں میجر جنرل عمر بلال، بریگیڈئیر عبدالرؤف، لیفٹیننٹ کرنل منظور سعید ،لیفٹیننٹ کرنل فخر، میجر زاہد، میجر ریٹائرڈ شعیب ،ڈپٹی ڈائریکٹر این ایل سی تسکین، نائیک مسعود، سپاہی عبدالقیوم، بلال ریاض ولد میجر جنرل نسیم ریاض، علی حسن ولد کرنل شبیر، حسن ولد کرنل شخران، سیدالحسن ولد لیفٹیننٹ کرنل فخر، ضامن ولد انجنیئر اکمل حسین، قیصر خان ولد سید اکبر، عادل رؤف ولد عبدالرؤف، محمد خان ولد سلطان بخش،فضل خان ولد مددخان،خالد جاوید ،غلام مجتبیٰ،جاوید ولد غنی خان، محمد فیاض ،اسد و دیگر شامل ہیں۔ 
زخمیوں میں سابق وائس آرمی چیف جنرل ریٹائرد محمد یوسف بھی شامل ہیں ان کے بازوپرزخم آئے ہیں۔
پولیس ذرائع کے مطابق جمعہ کی دوپہر تقریباً ایک بجے سلور رنگ کی گاڑی میں سوار دہشت گرد پریڈلائن کے علاقے میں پہنچے۔
انہوں نے کالونی روڈ کے گرد بنی دیوار کے ساتھ سیڑھی لگائی اور اندر داخل ہوگئے۔ 
جیسے ہی یہاں واقع مسجدمیں نمازجمعہ شروع ہوئی تودہشت گرد مسجدمیں جاگھسے اورنمازیوں پر دستی بم پھینکتے ہوئے اندھا دھند فائرنگ شروع کردی۔
اس کے فوراً بعد دو دہشت گردوں نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا۔ واقعہ میں17 بچوں سمیت 40 نمازی شہیدجبکہ 83 سے زائد زخمی ہوگئے۔ 
دہشت گردی کے واقعہ کی اطلاع ملنے کے بعدسکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا اور بھرپور کارروائی کرتے ہوئے چار حملہ آوروں کو ہلاک کر دیا۔ 
اسی اثنا ء میں فوجی ہیلی کاپٹرز کے ذریعے فضائی نگرانی بھی کی جاتی رہی ۔ 
سکیورٹی فورسز نے جائے وقوعہ سے ایک کار بھی قبضے میں لے لی جو مبینہ طور پر دہشت گردوں نے وہاں آنے کیلئے استعمال کی ۔ 
دہشت گردی کے اس واقعہ میں پریڈلائن مسجد کا ایک حصہ بھی شہیدہوگیا۔ 
جس علاقے میں یہ مسجد واقع ہے وہاں پاک فوج کے ریٹائرڈ اور حاضر سروس افسران بھی رہائش پذیر ہیں۔ 
دھماکوں پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے صدرآصف علی زرداری نے کہا ہے کہ انتہاپسندوں کی طرف سے ملک میں بم دھماکوں جیسی بہیمانہ کارروائیوں کے ذریعے دہشت گردی کے خلاف جنگ کو منطقی انجام تک پہنچانے کا حکومتی عزم کمزور نہیں کیا جاسکتا۔ 
انہوں نے یہ بات وزیراعلیٰ سرحدامیرحیدرخان ہوتی سے بات چیت کے دوران کی ، جنہوں نے ایوان صدرمیں ان سے ملاقات کی۔ 
صدارتی ترجمان کے مطابق صدر زرداری کا کہنا تھا کہ دہشت گردی کے عفریت کے مکمل خاتمے تک آپریشن جاری رہے گا۔ 
صدر نے دہشت گردی کے خلاف جاری جنگ کے دوران صوبہ سرحد کے عوام کی طرف سے دی جانے والی قربانیوں کو خراج تحسین پیش کیا۔ 
دریں اثناء وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی نے بھی آرمی چیف جنرل اشفاق پرویز کیانی کو ٹیلی فون کر کے راولپنڈی میں دھماکے پر اظہار افسوس کیا ۔ 
وزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے آرمی چیف سے گفتگو کرتے ہوئے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاک فوج کے عزم کو سراہا، انہوں نے دھماکے میں شہید ہونے والے جوانوں اور عام شہریوں کے لواحقین سے اظہار تعزیت کیا ہے۔
وزیر داخلہ رحمان ملک نے علماء سے اپیل کی ہے کہ وہ خود کش حملوں کے خلاف فتویٰ دیں۔ 
انہوں نے کہا کہ کرائے کے قاتلوں نے کئی نمازی بچے بھی شہید کئے۔
راولپنڈی میں دھماکے کے بعد میڈیاسے بات کرتے ہوئے وفاقی وزیر داخلہ رحمان ملک نے کہا کہ دہشت گردوں کا اسلام سے کوئی تعلق نہیں،ظالموں نے مسجد پر حملہ کرکے نمازیوں کی جانیں لی۔
انہوں نے کہا کہ مسجد پر حملہ کرنے والے اسلام اور انسانیت کے دشمن ہیں۔ 
رحمان ملک نے بتایا کہ مسجدوں پر حملہ کرنے والے غدار باہر سے نہیں آئے ہیں اور طالبان ، القاعدہ اور مختلف تنظیمیں مل کر کارروائیاں کررہی ہیں۔
انہوں نے علماء سے اپیل کی کہ وہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں حکومت کا ساتھ دیں اور خودکش حملوں کے خلاف فتوے دیں۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان اور افغانستان اس وقت حالت جنگ میں ہیں لیکن ہم پاکستان کے خلاف کارروائیاں کرنے والوں سے نمٹنے کے لئے تیار ہیں۔
انہوں نے بتایا کہ باڑہ سے دن قبل پکڑا جانے والا اسلحہ بھارت کا ہے۔

وزیر مذہبی امور حامد سعید کاظمی نے کہا ہے کہ راولپنڈی میں پریڈ لائن مسجد میں ہونے والی دہشت گردی کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے اور یہ اسلام اور پاکستان کے خلاف سازش ہے ۔ 
جیو نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ مساجد ، دینی مدارس اور امام بارگاہوں پر حملے اسلام سے متصادم ہیں اور کوئی مسلمان ایسا مکروہ فعل انجام نہیں دے سکتا، مگر افسوس کا مقام یہ ہے کہ جو لوگ یہ تخریب کاری کررہے ہیں وہ خود کو اسلام کا ٹھیکیدار سمجھتے ہیں اور اپنے اس عمل کو اسلام کی خدمت قرار دیتے ہیں۔ 
انہوں نے کہا کہ دہشت گردوں کی اس طرح برین واشنگ کی جاتی ہے کہ وہ اس حوالے سے اسلامی احکامات تک کو خاطر میں نہیں لاتے۔ 
انہوں نے کہا کہ دہشت گرد اس طرح کے حملے کے ذریعے پاک فوج پر آپریشن راہ نجات ختم کرنے کیلئے دباؤ ڈالنا چاہتے ہیں۔  


source : http://www.abna.ir/data.asp?lang=6&Id=173662
  844
  0
  0
امتیاز شما به این مطلب ؟

آخرین مطالب

      با افتتاح سی ودومین نمایشگاه بین المللی کتاب؛ نشر ...
      گزارش تصویری/ سخنرانی استاد انصاریان در مسجد جامع آل ...
      گزارش تصویری/ سخنرانی استاد انصاریان در حسینیه هدایت ...
      استاد انصاریان: دعا عامِل رفع گرفتاری‌ها، سختی‌ها و ...
      مدیر کتابخانه تخصصی امام سجاد(ع)؛ بیش از 700 نسخه خطی ...
      در آستانه ولادت حضرت امام سجاد علیه السلام؛ تفسیر و ...
      استاد انصاریان تبیین کرد: خداوند در چه صورتی چشم و گوش ...
      نگاهی به کتاب «تواضع و آثار آن» اثر استاد انصاریان
      اعلام برنامه سخنرانی استاد انصاریان درماه شعبان ...
      استاد انصاریان: کنار اسلام دین‌سازی نکنید/ داروی حل ...

بیشترین بازدید این مجموعه

      کودکی که درباره یوسف و زلیخا شهادت داد و جبرئیل را ...
      متن سخنرانی استاد انصاریان در مورد امام علی (ع)
      متن سخنرانی استاد انصاریان در مورد حجاب
      عکس/ پرچم گنبد حرم مطهر امام حسین(ع)
      مطالب ناب استاد انصاریان در «سروش»، «ایتا»، «بله» و ...
      استاد انصاریان: لقمه حلال نسخه شفابخش همه بیماری ها و ...
      استاد انصاریان: کنار اسلام دین‌سازی نکنید/ داروی حل ...
      اعلام برنامه سخنرانی استاد انصاریان درماه شعبان ...
      نگاهی به کتاب «تواضع و آثار آن» اثر استاد انصاریان
      استاد انصاریان: دعا عامِل رفع گرفتاری‌ها، سختی‌ها و ...

 
user comment