اردو
Wednesday 27th of March 2019
  956
  0
  0

”تحفظ ناموس رسالت کارواں“ میں عوام کی بھرپور شرکت

جماعت اسلامی سندھ کے امیر اسداللہ بھٹو نے کہا ہے کہ توہین رسالت کا مسئلہ مسلمانوں کے تمام مسالک کے مطابق متفق علیہ ہے اور پوری امت اس پر متحد ہے کہ ”توہین رسالت ناقابل معافی جرم ہے “ امریکی سرپرستی میں انٹرنیٹ کے ذریعے مغربی ممالک کی جانب سے فیس بک کی ویب سائٹ پر توہین رسالت کے عالمی مقابلے کا انعقاد بدنیتی اور اسلام دشمنی پر مبنی ہے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے اتوار کو جماعت اسلامی زون گلستان جوہر کے تحت ”تحفظ ناموس رسالت ﷺ کارواں “ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ کارواں صوبائی امیر اسداللہ بھٹو کی قیادت میں صفورا چورنگی سے شروع ہوکر یونیورسٹی روڈ ،موسمیات چوک ،کامران چورنگی ،جوہر چورنگی سے ہوتا ہوا جوہر موڑ پر ایک بڑے جلسہ عام کی شکل اختیار کرگیا ۔کاروں ، بسوں ،موٹر سائیکلوں پر سوار کارو اں میں شریک افراد توہین آمیز خاکے شائع کرانے والے ممالک ،فیس بک کے خلاف اور حرمت رسول پر جان بھی قربان ہے ،غلامی رسول میں موت بھی قبول ہے ،محمد کے غلاموں کو امریکا کی غلامی قبول نہیں ہے جیسے فلک شگاف نعرے لگا رہے تھے ۔کارواں سے کراچی کے امیر محمد حسین محنتی ،رفیق احمد خان، نصراللہ شجیع ،یونس بارائی ،سید قطب و دیگر نے بھی خطاب کیا ۔اسداللہ بھٹو نے مزید کہا کہ کافی عرصہ سے توہین رسالت کے کارٹون بنانے کا سلسلہ جاری اور مختلف مغربی ممالک اس کی سرپرستی کررہے ہیں ۔پہلی مرتبہ امریکی سرپرستی میں مغربی دنیا متحد ہوکر شان مصطفی پر حملہ آور ہوئی ہے لہٰذا یہ مغرب کا اسلام پر حملہ مسلم دنیا اور مغرب کے درمیان سرد جنگ کا آغاز ہے ۔پاکستان سمیت دنیا بھر کے مسلمانوں اور انسانیت پسند ادارے اس کیخلاف احتجاج کررہے ہیں ،مسلمانوں کا احتجاج ایک فطری ردعمل ہے ‘ امریکا اور مغربی ممالک ایک طرف انسانی حقوق اور مذہبی رواداری کی بات کرتے ہیں اور دوسری طرف توہین رسالت کا عالمی مقابلہ کراکر انسانی حقوق و مذہبی رواداری کی شدید خلاف ورزی کی ہے لیکن افسوس یہ ہے کہ حکومت پاکستان نے توہین رسالت کے اہم مسئلے پر خاطر خواہ کردار ادانہیں کیا ۔دفتر خارجہ کی جانب سے چند نرم الفاظ میں احتجاج پاکستان کے عوام کے جذبات کے ساتھ مذاق کے مترادف ہے ۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ قومی و صوبائی اسمبلیوں کے اجلاس بلاکر عالمی توہین رسالت کے مقابلے کی شدید مذمت کی جائے ،امریکی سفیر کو طلب کرکے پاکستانی عوام کے شدید جذبات کے مطابق سخت احتجاج کیا جائے اور خبردار کیا جائے کہ اگرآئندہ امریکا اور مغربی ممالک سمیت کوئی بھی ملک توہین رسالت کا مرتکب ہوا تو اسے پاکستان اور امت مسلمہ کے شدید ردعمل کا سامنا کرنا پڑے گا ۔اس موقع پر جماعت اسلامی کراچی کے امیر محمد حسین محنتی نے اپنے خطاب میں کہا کہ یہودی لابی کی جانب سے ایک بار پھر توہین آمیز خاکے امت مسلمہ کی غیرت ایمانی کو للکارنے کے مترادف ہے ،گزشتہ کئی برس سے مسلمانوں کے ساتھ یہ رویہ رکھا جارہا ہے جس پر مسلم حکمرانوں کا خاموش تماشائی کردار اور بے حسی افسوس ناک و شرمناک عمل ہی‘ اس صورتحال میں عوام کو میدان میں آکر اغیار کی سازشوں کو ناکام اور تحفظ ناموس رسالت کی حفاظت کیلئے اپنا کردار ادا کرنا ہوگا ۔


source : http://omidworld.org/ur/component/news/?cat=news&nid=4896
  956
  0
  0
امتیاز شما به این مطلب ؟

latest article

      خلیج فارس کی عرب ریاستوں میں عید الاضحی منائی جارہی ہے
      پاکستان، ہندوستان، بنگلہ دیش اور بعض دیگر اسلامی ...
      پاکستان کی نئی حکومت: امیدیں اور مسائل
      ایرانی ڈاکٹروں نے کیا فلسطینی بیماروں کا مفت علاج+ ...
      حزب اللہ کا بے سر شہید پانچ سال بعد آغوش مادر میں+تصاویر
      امریکہ کے ساتھ مذاکرات کے لیے امام خمینی نے بھی منع کیا ...
      کابل میں عید الفطر کے موقع پر صدر اشرف غنی کا خطاب
      ایرانی ڈاکٹروں کی کراچی میں جگر کی کامیاب پیوندکاری
      شیطان بزرگ جتنا بھی سرمایہ خرچ کرے اس علاقے میں اپنے ...
      رہبر انقلاب اسلامی سے ایرانی حکام اور اسلامی ممالک کے ...

 
user comment